آغاز کی تاریخ

فرحت احساس

آغاز کی تاریخ

فرحت احساس

MORE BYفرحت احساس

    اک مسافر ہوں

    بڑی دور سے چلتا ہوا آیا ہوں یہاں

    راہ میں مجھ سے جدا ہو گئی صورت میری

    اپنے چہرے کا بس اک دھندلا تصور ہے مری آنکھوں میں

    راستے میں مرے قدموں کے نشاں بھی ہوں گے

    ہو جو ممکن تو انہیں سے

    مرے آغاز کی تاریخ سنو

    موضوعات:

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY