چھوٹے قد کے لوگ

احتشام اختر

چھوٹے قد کے لوگ

احتشام اختر

MORE BYاحتشام اختر

    بلند بانگ دعووں کی

    آوازیں

    کھوٹے سکوں کی طرح

    بجتی ہیں

    پھر بھی چھوٹے قد کے لوگ

    ان قد آور آوازوں کو

    سنتے رہتے ہیں

    کاغذ کے ٹکڑوں کی

    اب کوئی قیمت نہ رہی

    پھر بھی بھوکی آنکھیں

    انہیں ڈھونڈھتی ہیں

    اور ناکام رہتی ہیں

    اور بے رحم ہاتھ

    انہیں جمع کرتے رہتے ہیں

    چھوٹے قد کے لوگ

    اپنی آواز کھو چکے ہیں

    وہ صرف دیکھ سکتے ہیں

    اور سن سکتے ہیں

    مأخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY