فرہاد

مصطفی زیدی

فرہاد

مصطفی زیدی

MORE BY مصطفی زیدی

    اس سے ملنا تو اس طرح کہنا

    تجھ سے پہلے مری نگاہوں میں

    کوئی روپ اس طرح نہ اترا تھا

    تجھ سے آباد ہے خرابۂ دل

    ورنہ میں کس قدر اکیلا تھا

    تیرے ہونٹوں پہ کوہسار کی اوس

    تیرے چہرے پہ دھوپ کا جادو

    تیری سانسوں کی تھرتھراہٹ میں

    کونپلوں کے کنوار کی خوشبو

    وہ کہے گی کہ ان خطابوں سے

    اور کس کس پہ جال ڈالے ہیں

    تم یہ کہنا کہ پیش ساغر جم

    اور سب مٹیوں کے پیالے ہیں

    ایسا کرنا کہ احتیاط کے ساتھ

    اس کے ہاتھوں سے ہاتھ ٹکرانا

    اور اگر ہو سکے تو آنکھوں میں

    صرف دو چار اشک بھر لانا

    عشق میں اے مبصرین کرام

    یہی تکنیک کام آتی ہے

    اور یہی لے کے ڈوب جاتی ہے

    مآخذ:

    • کتاب : Kulliyat-e-Mustafa Zaidi(Koh-e-nida) (Pg. 36)
    • Author : Mustafa Zaidi
    • مطبع : Alhamd Publications (2011)
    • اشاعت : 2011

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY