خواب کا در بند ہے

شہریار

خواب کا در بند ہے

شہریار

MORE BY شہریار

    میرے لیے رات نے

    آج فراہم کیا

    ایک نیا مرحلہ

    نیندوں سے خالی کیا

    اشکوں سے پھر بھر دیا

    کاسہ مری آنکھ کا

    اور کہا کان میں

    میں نے ہر اک جرم سے

    تم کو بری کر دیا

    میں نے سدا کے لیے

    تم کو رہا کر دیا

    جاؤ جدھر چاہو تم

    جاگو کہ سو جاؤ تم

    خواب کا در بند ہے

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    خواب کا در بند ہے نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY