مشکل کام

اشفاق حسین

مشکل کام

اشفاق حسین

MORE BYاشفاق حسین

    ہمیشہ کی طرح

    تم آج بھی اچھی ہو

    لیکن کل بہت اچھی تھیں

    اور وہ کل

    مری یادوں کا حصہ ہے

    وہی جو کل تھا

    وہ ہے آج

    لیکن فرق اتنا ہے

    تمہاری جھیل سی آنکھوں میں

    میرے نام کا

    کوئی کنول کھلتا نہیں

    تمہارے ہونٹ

    میرا نام دہراتے نہیں ہیں

    رفاقت اور چاہت کا

    کوئی بھی گیت

    اب گاتے نہیں ہیں

    میں

    کل اور آج کی دنیاؤں میں

    کھویا ہوا انساں

    کل کو بھولنا چاہوں

    تو اس کا بھولنا مشکل ہے

    نا ممکن نہیں ہے

    سو میں

    تنہائی کے لمحوں میں

    مشکل کام کرنا چاہتا ہوں

    میں نا ممکن کو

    ممکن کی حدوں میں قید کرنا چاہتا ہوں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY