موم بتی

MORE BYعادل اسیر دہلوی

    راتوں کو دکھ سہتی ہوں میں

    دن میں غافل رہتی ہوں میں

    روشن مجھ سے ڈیرا ڈیرا

    دیکھ کے مجھ کو بھاگے اندھیرا

    محفل میں جل جاتی ہوں میں

    شب بھر میں ڈھل جاتی ہوں میں

    بھیگ رہا ہے دامن میرا

    جلنے لگا ہے تن من میرا

    مجھ سے پتنگے ڈرتے ہیں

    پھر بھی وہ مجھ پر مرتے ہیں

    پاس وہ میرے جب آتے ہیں

    موت کا لقمہ بن جاتے ہیں

    عادلؔ میرا نام بتاؤ

    علم کی شمعیں ہر سو جلاؤ

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY