aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Azra Parveen's Photo'

احتجاج اور جدید سماجی مسائل کو اپنے شعری اظہار میں شامل کرنے والی شاعرہ ۔

احتجاج اور جدید سماجی مسائل کو اپنے شعری اظہار میں شامل کرنے والی شاعرہ ۔

عذرا پروین کے اشعار

زمیں کے اور تقاضے فلک کچھ اور کہے

قلم بھی چپ ہے کہ اب موڑ لے کہانی کیا

اس نے میرے نام سورج چاند تارے لکھ دیا

میرا دل مٹی پہ رکھ اپنے لب روتا رہا

چار سمتیں آئینہ سی ہر طرف

تم کو کھو دینے کا منظر اور میں

سمٹ گئی تو شبنم پھول ستارہ تھی

بپھر کے میری لہر لہر انگارہ تھی

رنگ اپنے جو تھے بھر بھی کہاں پائے کبھی ہم

ہم نے تو سدا رد عمل میں ہی بسر کی

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے