noImage

حنیف ساجد

غزل 1

 

اشعار 2

انقلاب صبح کی کچھ کم نہیں یہ بھی دلیل

پتھروں کو دے رہے ہیں آئنے کھل کر جواب

پتھروں سے کب تلک باندھے گی امید وفا

زندگی دیکھے گی کب تک جاگتی آنکھوں سے خواب