noImage

امتیاز ساغر

پاکستان

غزل 3

 

اشعار 3

اسی درخت کو موسم نے بے لباس کیا

میں جس کے سائے میں تھک کر اداس بیٹھا تھا

ہوگا بہت شدید تمازت کا انتقام

سائے سے مل کے روئے گی دیوار دیکھنا

ہیں گھر کی محافظ مری دہکی ہوئی آنکھیں

میں طاق میں رکھ آیا ہوں جلتی ہوئی آنکھیں