Iqbal Sajid's Photo'

اقبال ساجد

1932 - 1988 | لاہور, پاکستان

مقبول عوامی پاکستانی شاعر ، کم عمری میں وفات

مقبول عوامی پاکستانی شاعر ، کم عمری میں وفات

تخلص : 'ساجدؔ'

اصلی نام : محمّد اقبال

وفات : 18 May 1988

سورج ہوں زندگی کی رمق چھوڑ جاؤں گا

میں ڈوب بھی گیا تو شفق چھوڑ جاؤں گا

نام محمد اقبال ساجد اور تخلص ساجد ہے۔۱۹۳۲ء میں لنڈھورا، ضلع سہارن پور(یوپی) میں پیدا ہوئے۔ تقسیم ہند کے بعد لاہور منتقل ہوگئے۔ میٹرک تک تعلیم پائی۔ کچھ دنوں ریڈیو پاکستان سے وابستہ رہے۔ کالم نویسی بھی کی۔ اقبال ساجد نے مجبوری میں اپنا کلام بہت سستے داموں بیچ دیا تھا۔ انھیں اس بات کا دکھ بھی تھا۔ جب اقبال ساجد نے اپنے اشعار بیچنا چھوڑ دیے تو مجبوری میں انھیں ایسے پیشے اختیار کرنا پڑے جسے ہمارے معاشرے میں اچھی نگاہ سے نہیں دیکھا جاتا۔ نازش حیدری ان کے استاد تھے۔ فاقہ کشی اور کثرت شراب نوشی کے باعث ۱۸؍مئی۱۹۸۸ء کو لاہور میں انتقال کرگئے۔ مجموعۂ کلام’’اثاثہ ‘‘ کے نام سے بعد ازمرگ مرتب کیا گیا۔ بحوالۂ:پیمانۂ غزل(جلد دوم)،محمد شمس الحق،صفحہ:271