Shafiq Jaunpuri's Photo'

شفیق جونپوری

1902 - 1963 | جون پور, انڈیا

شفیق جونپوری کے اشعار

عشق کی ابتدا تو جانتے ہیں

عشق کی انتہا نہیں معلوم

تجھے ہم دوپہر کی دھوپ میں دیکھیں گے اے غنچے

ابھی شبنم کے رونے پر ہنسی معلوم ہوتی ہے

جلا وہ شمع کہ آندھی جسے بجھا نہ سکے

وہ نقش بن کہ زمانہ جسے مٹا نہ سکے

فریب روشنی میں آنے والو میں نہ کہتا تھا

کہ بجلی آشیانے کی نگہباں ہو نہیں سکتی

آ گیا تھا ایک دن لب پر جفاؤں کا گلا

آج تک جب ان سے ملتے ہیں تو شرماتے ہیں ہم

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے