Shahram Sarmadi's Photo'

شہرام سرمدی

1975 | تاجکستان

بنام عشق اک احسان سا ابھی تک ہے

وہ سادہ لوح ہمیں چاہتا ابھی تک ہے

مرے علاوہ سبھی لوگ اب یہ مانتے ہیں

غلط نہیں تھی مری رائے اس کے بارے میں

فقط زمان و مکاں میں ذرا سا فرق آیا

جو ایک مسئلۂ درد تھا ابھی تک ہے