الہ آباد پر شاعری

الہ آباد اپنے سنگم کی خوبصورتی ، اپنی قدیم تہذیبی روایتوں اور مل جل کر رہنے کے کلچر کی وجہ سے شاعروں کیلئے بہت دلچسپ شہر رہا ہے ۔ الہ آباد کی ان منفرد حثیتوں پر بہت سی نظمیں بھی لکھی گئی ہیں لیکن یہاں ہم غزلوں سے کچھ شعروں کا انتخاب آپ کیلئے پیش کر رہے ہیں ۔ اس شہر کی یاد تازہ کیجئے ۔

کچھ الہ آباد میں ساماں نہیں بہبود کے

یاں دھرا کیا ہے بجز اکبر کے اور امرود کے

اکبر الہ آبادی

اثر یہ تیرے انفاس مسیحائی کا ہے اکبرؔ

الہ آباد سے لنگڑا چلا لاہور تک پہنچا

اکبر الہ آبادی

تین تربینی ہیں دو آنکھیں مری

اب الہ آباد بھی پنجاب ہے

امام بخش ناسخ

یا الہ آباد میں رہیے جہاں سنگم بھی ہو

یا بنارس میں جہاں ہر گھاٹ پر سیلاب ہے

قمر جمیل

متعلقہ موضوعات