noImage

واصف دہلوی

1910 - 1987 | دلی, ہندوستان

غزل

بجھتے ہوئے چراغ فروزاں کریں_گے ہم

نعمان شوق

ذرہ حریف_مہر درخشاں ہے آج کل

نعمان شوق

نسیم_صبح یوں لے کر ترا پیغام آتی ہے

نعمان شوق

وہ جلوہ طور پر جو دکھایا نہ جا سکا

نعمان شوق

وہ جن کی لو سے ہزاروں چراغ جلتے تھے (ردیف .. ا)

نعمان شوق

کسی کے عشق کا یہ مستقل آزار کیا کہنا

نعمان شوق

کھلنے ہی لگے ان پر اسرار_شباب آخر

نعمان شوق

ہم_سفر تھم تو سہی دل کو سنبھالوں تو چلوں

نعمان شوق

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI