Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Mukhtar Tilhari's Photo'

مختار تلہری

1960 | بریلی, انڈیا

مختار تلہری

اشعار 12

دل دکھانا مرا نہیں مقصد

حق بیانی مری نہیں جاتی

  • شیئر کیجیے

مری ہنسی کو سر بزم سہہ لیا اس نے

پھر اس کے بعد اکیلے میں انتقام لیا

  • شیئر کیجیے

آج ایسی وادیوں سے ہو کے آیا ہوں جہاں

پیڑ تھے نزدیک لیکن دور تک سایہ نہ تھا

  • شیئر کیجیے

رہا نہ کام اس کی جستجو میں

ادھر میں خود سے بھی گم ہو گیا ہوں

  • شیئر کیجیے

ہمارے ذہن پہ اس کا اثر تو اب بھی ہے

بچھڑنے والا شریک سفر تو اب بھی ہے

  • شیئر کیجیے

غزل 7

کتاب 6

 

"بریلی" کے مزید مصنفین

 

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے