Author : Khalilur Rahman Azmi

Publisher : Director Qaumi Council Bara-e- Farogh-e-Urdu Zaban, New Delhi

Year of Publication : 2008

Language : Urdu

Categories : Text Books, Movements

Sub Categories : Criticism, Literary movements

Pages : 406

ISBN No./ISSN NO : 81-7587-249-7

Contributor : Huma Mirza (Daughter of Khalilur Rahman Azmi)

urdu mein taraqqi pasand adabi tahreek

About The Book

ہر زبان و ادب میں کچھ نہ کچھ ایسی تحریکیں ہوتی ہیں جن کی وجہ سے ایک پورا کا پورا ادبی پس منظر بدل جاتا ہے ۔ ان تحریکوں کے کچھ اسباب ہوتے ہیں جن کی بنا پر وہ وجود پزیر ہوتی ہیں ۔ جب ایک تحریک آتی ہے تو دوسری زوال پزیر ہونے لگتی ہے یا اس کا اثر کم ہو جاتا ہے ۔ ہر تحریک کا ایک خاص مقصد ہوتا ہے جو اپنے مقصد کو پورے ہونے کے ساتھ ساتھ ماند پڑنے لگی ہیں ۔ علی گڑھ تحریک نے اردو ادب میں ایک انقلاب برپا کر دیا تھا جس انقلاب کو ترقی پسند تحریک نے بالکل پست کر دیا ۔ ترقی پسند تحریک بھی انقلابی نعروں کے ساتھ اٹھی اور بہت جلد ہی اس نے پورے ادبی حلقے کی توجہ کو اپنی طرف مبذول کر لیا۔ یہ کتاب اسی ترقی پسند تحریک پر مبنی ہے۔ کتاب موٹے طور پر تین حصوں میں منقسم ہے ۔ پہلا حصہ ترقی پسند مصنفین کی تحریک پر محیط ہے جس میں تحریک کا آغاز ، ارتقاء انجمن اور ان مصنفین کے بارے میں ہے جو پیش پیش تھے ۔ دوسرا حصہ ترقی پسند ادبی سرمائے کا جائزہ جس میں اس عہد کے شعرا ، افسانہ نگار، ناول نگار، ڈرامہ نگار ، طنز و مزاح ، تراجم وغیرہ کا ذکر ہے ۔ کتاب کا تیسرا جز ترقی پسند تنقید پر مبنی ہے ۔

.....Read more

About The Author

Noted Urdu Poet and literary critic Khaleel-ur-Rahman Azmi was born at Sedhan Sultanpur. His father Maulana Mohammad Shafi was a very pious man. Khaleel did his doctorate (Ph.D.) in Urdu from Aligarh Muslim University in 1957. He joined Aligarh Muslim University as a lecturer in the Urdu Department and worked there all his life. He died in 1978. He started writing since his early school days and later associated himself with the Progressive Writers' Movement of Urdu literature. He was imprisoned in 1949 for his political views. His foremost publications include Kagzi Pairhan (1953), Naya Ahad Nama (1965) Fikr-o-Fan (1956) and Taraqqi Pasand Adabi Tahrik (1972).

.....Read more

More From Author

Read the author's other books here.

See More

What Others Read

Curious what other readers are upto? Check this list of favorite Urdu books of Rekhta readers.

See More

Popular And Trending Read

Find out most popular and trending Urdu books right here.

See More
Speak Now