Abu Mohammad Sahar's Photo'

ابو محمد سحر

1930 - 2002 | بھوپال, ہندوستان

ممتاز نقاد اور شاعر، ادبی تنقید وتحقیق کے حوالےسے کئی اہم کتابیں یادگار چھوڑیں

ممتاز نقاد اور شاعر، ادبی تنقید وتحقیق کے حوالےسے کئی اہم کتابیں یادگار چھوڑیں

237
Favorite

باعتبار

عشق کے مضموں تھے جن میں وہ رسالے کیا ہوئے

اے کتاب زندگی تیرے حوالے کیا ہوئے

تکمیل آرزو سے بھی ہوتا ہے غم کبھی

ایسی دعا نہ مانگ جسے بد دعا کہیں

ہندو سے پوچھیے نہ مسلماں سے پوچھیے

انسانیت کا غم کسی انساں سے پوچھیے

سحرؔ اب ہوگا میرا ذکر بھی روشن دماغوں میں

محبت نام کی اک رسم بے جا چھوڑ دی میں نے

ہوشمندی سے جہاں بات نہ بنتی ہو سحرؔ

کام ایسے میں بہت بے خبری آتی ہے

ہمیں تنہائیوں میں یوں تو کیا کیا یاد آتا ہے

مگر سچ پوچھیے تو ایک چہرا یاد آتا ہے

بلائے جاں تھی جو بزم تماشا چھوڑ دی میں نے

خوشا اے زندگی خوابوں کی دنیا چھوڑ دی میں نے

برق سے کھیلنے طوفان پہ ہنسنے والے

ایسے ڈوبے ترے غم میں کہ ابھر بھی نہ سکے

رہ عشق و وفا بھی کوچہ و بازار ہو جیسے

کبھی جو ہو نہیں پاتا وہ سودا یاد آتا ہے

پھر کھلے ابتدائے عشق کے باب

اس نے پھر مسکرا کے دیکھ لیا

عشق کو حسن کے اطوار سے کیا نسبت ہے

وہ ہمیں بھول گئے ہم تو انہیں یاد کریں

مرضی خدا کی کیا ہے کوئی جانتا نہیں

کیا چاہتی ہے خلق خدا ہم سے پوچھیے

بے ربطئ حیات کا منظر بھی دیکھ لے

تھوڑا سا اپنی ذات کے باہر بھی دیکھ لے

غم حبیب نہیں کچھ غم جہاں سے الگ

یہ اہل درد نے کیا مسئلے اٹھائے ہیں