Karamat Ali Karamat's Photo'

کرامت علی کرامت

1936 | اڑیسہ, ہندوستان

کرامت علی کرامت

غزل 14

اشعار 13

کوئی زمین ہے تو کوئی آسمان ہے

ہر شخص اپنی ذات میں اک داستان ہے

  • شیئر کیجیے

منزل پہ بھی پہنچ کے میسر نہیں سکوں

مجبور اس قدر ہیں شعور سفر سے ہم

  • شیئر کیجیے

ہمیشہ آگ کے دریا میں عشق کیوں اترے

کبھی تو حسن کو غرق عذاب ہونا تھا

  • شیئر کیجیے

غم فراق کو سینے سے لگ کے سونے دو

شب طویل کی ہوگی سحر کبھی نہ کبھی

  • شیئر کیجیے

میں لفظ لفظ میں تجھ کو تلاش کرتا ہوں

سوال میں نہیں آتا نہ آ جواب میں آ

کتاب 15

آب خضر

شعرائے اڑیسہ کا انتخاب کلام مع تذکرہ

1963

آوازِ جاراسورا

 

2008

گل کدۂ صبح وشام

 

2016

اضافی تنقید

 

1977

جوئے کہکشاں

 

1969

کرامت علی کرامت: ایک مطالعہ

 

2012

کلیات امجد نجمی

 

2017

لفظوں کا آکاش

 

2000

لفظوں کا آسمان

 

1984

نعت نبی میں نئی جہتیں

 

 

تصویری شاعری 2

کوئی زمین ہے تو کوئی آسمان ہے ہر شخص اپنی ذات میں اک داستان ہے

کوئی زمین ہے تو کوئی آسمان ہے ہر شخص اپنی ذات میں اک داستان ہے

 

مزید دیکھیے

"اڑیسہ" کے مزید شعرا

  • سید شکیل دسنوی سید شکیل دسنوی
  • احسن امام احسن احسن امام احسن
  • اثر نظامی اثر نظامی
  • ایاز احمد ایاز ایاز احمد ایاز