Aazim Kohli's Photo'

عازم کوہلی

دلی, ہندوستان

غزل 19

اشعار 21

کون جانے کس گھڑی یاں کیا سے کیا ہو کر رہے

خوف سا اک درمیاں ہوتا ہے تیرے شہر میں

  • شیئر کیجیے

مرے ہر زخم پر اک داستاں تھی اس کے ظلموں کی

مرے خوں بار دل پر اس کے ہاتھوں کا نشاں بھی تھا

مجھے عیاریاں سب آ گئی ہیں

میں اب تیرے نگر کا ہو گیا ہوں

ویڈیو 4

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر
ظرف ہے کس میں کہ وہ سارا جہاں لے کر چلے

عازم کوہلی

وفا اور عشق کے رشتے بڑے خوش_رنگ ہوتے ہیں

وفا اور عشق کے رشتے بڑے خوش_رنگ ہوتے ہیں عازم کوہلی

کدھر کا تھا کدھر کا ہو گیا ہوں

عازم کوہلی

ہو ستم کیسا بھی اب حالات کی شمشیر کا

عازم کوہلی

مزید دیکھیے

شعرا کے مزید "دلی"

  • دتا تریہ کیفی دتا تریہ کیفی
  • سالم سلیم سالم سلیم
  • شکیل جمالی شکیل جمالی
  • بلقیس ظفیر الحسن بلقیس ظفیر الحسن
  • چندر بھان خیال چندر بھان خیال
  • ترکش پردیپ ترکش پردیپ
  • تلوک چند محروم تلوک چند محروم
  • ارشاد خان سکندر ارشاد خان سکندر
  • تالیف حیدر تالیف حیدر
  • ضیا فتح آبادی ضیا فتح آبادی

Added to your favorites

Removed from your favorites