noImage

حبیب اشعر دہلوی

1919 - 1971 | دلی, ہندوستان

صبر اے دل کہ یہ حالت نہیں دیکھی جاتی

ٹھہر اے درد کہ اب ضبط کا یارا نہ رہا

یوں تو اب بھی ہے وہی رنج وہی محرومی

وہ جو اک تیری طرف سے تھا اشارا نہ رہا