Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Taj Saeed's Photo'

تاج سعید

1933 - 2002 | پیشاور, پاکستان

تاج سعید

غزل 6

نظم 2

 

اشعار 4

کس نے آ کر ہم کو دی آواز پچھلی رات میں

کون ہم کو چھیڑنے آیا ہے ان لمحات میں

میں نے ظلمت کے فسوں سے بھاگنا چاہا مگر

میرے پیچھے بھاگتی پھرتی مری رسوائی تھی

مسئلہ یہ بھی تو ہے اس عہد کا اے جان جاں

کیوں نچھاور جاں کریں کس کے لیے زندہ رہیں

پتا پتا شاخ سے ٹوٹے دروازوں پہ وحشت سی

یارو پریم کتھا میں کس نے درد کی تان ملائی ہے

دوہا 2

ہر اک کا دل موہ لیتی تھی اس کی اک مسکان

یہ مسکان تھی ساتھ اس کے چہرے کی پہچان

  • شیئر کیجیے

مجھ سے کنی کاٹ نہ گوری میں ہوں تیری چھایا

میں اک داتا جوگی بن کر تیری گلی میں آیا

  • شیئر کیجیے
 

کتاب 12

"پیشاور" کے مزید شعرا

 

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے