Zeb Ghauri's Photo'

زیب غوری

1928 - 1985 | کانپور, ہندوستان

ہندوستان کے ممتاز ترین جدید شاعروں میں نمایاں

ہندوستان کے ممتاز ترین جدید شاعروں میں نمایاں

غزل 61

اشعار 58

زخم لگا کر اس کا بھی کچھ ہاتھ کھلا

میں بھی دھوکا کھا کر کچھ چالاک ہوا

جتنا دیکھو اسے تھکتی نہیں آنکھیں ورنہ

ختم ہو جاتا ہے ہر حسن کہانی کی طرح

زخم ہی تیرا مقدر ہیں دل تجھ کو کون سنبھالے گا

اے میرے بچپن کے ساتھی میرے ساتھ ہی مر جانا

کتاب 3

چاک

 

1985

زرد زرخیز

 

1976

شمارہ نمبر-008،009

1985

 

آڈیو 43

بجھ کر بھی شعلہ دام_ہوا میں اسیر ہے

بجھ کر بھی شعلہ دام_ہوا میں اسیر ہے

بس ایک پردۂ_اغماض تھا کفن اس کا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI