noImage

احمق پھپھوندوی

1895 - 1957 | اٹاوہ, ہندوستان

طنز و مزاح کے شاعر

طنز و مزاح کے شاعر

نظم 10

اشعار 2

یہ کہہ رہی ہے اشاروں میں گردش گردوں

کہ جلد ہم کوئی سخت انقلاب دیکھیں گے

  • شیئر کیجیے

جو ارزاں ہے تو ہے ان کی متاع آبرو ورنہ

ذرا سی چیز بھی بے حد گراں ہے اس زمانے میں

  • شیئر کیجیے
 

مزاحیہ 1

 

کتاب 3

حضرت احمق کے سواسو شعر

 

 

نقش حکمت

 

1944

زندان حماقت

 

1922

 

"اٹاوہ" کے مزید شعرا

  • محمد علی ساحل محمد علی ساحل
  • نثار اٹاوی نثار اٹاوی