Bekhud Dehlvi's Photo'

بیخود دہلوی

1863 - 1955 | دلی, ہندوستان

داغ دہلوی کے شاگرد

داغ دہلوی کے شاگرد

غزل

آپ ہیں بے_گناہ کیا کہنا

نعمان شوق

ایسا بنا دیا تجھے قدرت خدا کی ہے

نعمان شوق

بزم_دشمن میں بلاتے ہو یہ کیا کرتے ہو

نعمان شوق

بیتاب رہیں ہجر میں کچھ دل تو نہیں ہم

نعمان شوق

پچھتاؤگے پھر ہم سے شرارت نہیں اچھی

نعمان شوق

حجاب دور تمہارا شباب کر دے_گا

نعمان شوق

خدا رکھے تجھے میری برائی دیکھنے والے

نعمان شوق

دونوں ہی کی جانب سے ہو گر عہد_وفا ہو

نعمان شوق

دے محبت تو محبت میں اثر پیدا کر

نعمان شوق

عاشق سمجھ رہے ہیں مجھے دل لگی سے آپ

نعمان شوق

عاشق ہیں مگر عشق نمایاں نہیں رکھتے

نعمان شوق

لڑائیں آنکھ وہ ترچھی نظر کا وار رہنے دیں

نعمان شوق

مجھ کو نہ دل پسند نہ وہ بے_وفا پسند

نعمان شوق

معشوق ہمیں بات کا پورا نہیں ملتا

نعمان شوق

وہ دیکھتے جاتے ہیں کنکھیوں سے ادھر بھی

نعمان شوق

کب تک کریں_گے جبر دل_ناصبور پر

نعمان شوق

ہر ایک بات تری بے_ثبات کتنی ہے

نعمان شوق

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI