Ibn e Insha's Photo'

ابن انشا

1927 - 1978 | کراچی, پاکستان

ممتاز پاکستانی شاعر ، اپنی غزل ’ کل چودھویں کی رات تھی‘ کے لئے مشہور

ممتاز پاکستانی شاعر ، اپنی غزل ’ کل چودھویں کی رات تھی‘ کے لئے مشہور

ابن انشا کے ویڈیو

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر

ابن انشا

ابن انشا

ابن انشا

ابن انشا

دروازہ کھلا رکھنا

دل درد کی شدت سے خوں_گشتہ و سی_پارہ ابن انشا

فرض کرو

فرض کرو ہم اہل_وفا ہوں، فرض کرو دیوانے ہوں ابن انشا

کل چودھویں کی رات تھی شب بھر رہا چرچا ترا

ابن انشا

اس بستی کے اک کوچے میں

اس بستی کے اک کوچے میں اک انشاؔ نام کا دیوانا ابن انشا

جلوہ_نمائی بے_پروائی ہاں یہی ریت جہاں کی ہے

ابن انشا

کچھ دے اسے رخصت کر

کچھ دے اسے رخصت کر کیوں آنکھ جھکا لی ہے ابن انشا

ویڈیو کا زمرہ
دیگر

نعیم سرمد

"Masla bachon ke namon ka" by Ibn-e-Insha.

"Masla bachon ke namon ka" by Ibn-e-Insha. ضیا محی الدین

Ibn e Insha - Bahadur Allah Ditta

Ibn e Insha - Bahadur Allah Ditta ضیا محی الدین

Ibn-e-Insha - ittefaq main barkat hai

Ibn-e-Insha - ittefaq main barkat hai ضیا محی الدین

Ibn-e-Insha (Faiz sahib pe Mazahiya khaka)

Ibn-e-Insha (Faiz sahib pe Mazahiya khaka) ضیا محی الدین

اس بستی کے اک کوچے میں

اس بستی کے اک کوچے میں نامعلوم

انشاؔ_جی اٹھو اب کوچ کرو اس شہر میں جی کو لگانا کیا

انشاؔ_جی اٹھو اب کوچ کرو اس شہر میں جی کو لگانا کیا امانت علی خان

انشاؔ_جی اٹھو اب کوچ کرو اس شہر میں جی کو لگانا کیا

انشاؔ_جی اٹھو اب کوچ کرو اس شہر میں جی کو لگانا کیا حامد علی خان

ایک بار کہو تم میری ہو

ایک بار کہو تم میری ہو احمد جہانزیب

ایک لڑکا

ایک لڑکا نامعلوم

دل عشق میں بے_پایاں سودا ہو تو ایسا ہو

دل عشق میں بے_پایاں سودا ہو تو ایسا ہو عابدہ پروین

دیکھ ہمارے ماتھے پر یہ دشت_طلب کی دھول میاں

دیکھ ہمارے ماتھے پر یہ دشت_طلب کی دھول میاں ریشما

سب مایا ہے

سب مایا ہے سلمان علوی

فرض کرو

فرض کرو فہد

فرض کرو

فرض کرو نامعلوم

فرض کرو

فرض کرو چھایا گانگولی

کل چودھویں کی رات تھی شب بھر رہا چرچا ترا

کل چودھویں کی رات تھی شب بھر رہا چرچا ترا محمد افراہیم

کلام شاعر بہ زبان شاعر

دیگر

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے