aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Jagat Mohan Lal Ravan's Photo'

جگت موہن لال رواں

1889 - 1934 | لکھنؤ, انڈیا

اپنی رباعیات اور گوتم بدھ پر طویل نظم کے لیے مشہور

اپنی رباعیات اور گوتم بدھ پر طویل نظم کے لیے مشہور

جگت موہن لال رواں کا تعارف

تخلص : 'رواں'

اصلی نام : چودھری جگت موہن لال

پیدائش : 14 Jan 1889 | سیتا پور, اتر پردیش

وفات : 26 Sep 1934

رشتہ داروں : عزیز لکھنوی (استاد)

LCCN :n88015566

آئیں پسند کیا اسے دنیا کی راحتیں

جو لذت آشنائے ستم ہائے ناز تھا

جگت موہن لال روں کی شاعری نے اردو کی شعری روایت میں فکری ، سماجی اور تہذیبی موضوعات ومضامین کو عام کرنے میں اہم کردار ادا کیا ۔ ان کی نظمیں اور رباعیاں ایک بہت ثروت مند فکری بیانیے کو لئے ہوئے ہیں ۔

رواں کی پیدائش ۱۴ جنوری ۱۸۸۹ کو مورانواں ضلع سیتا پور میں ہوئی ان کے والد گنگا پرشاد کا انتقال ان کے بچپن میں ہی ہوگیا تھا ۔ والد کی وفات کے بعد ان کی پرورش بڑے بھائی منشی کنہیا لال نے کی ۔ رواں بہت ذہین طالب علم تھے ۔ ایل ایل بی کی سند حاصل کی اور وکالت کے پیشے سے وابستہ ہوگئے ۔ رواں کی طبیعت بچپن ہی سے شاعری کی طرف مائل تھی ، عزیز لکھنوی سے کلام پر اصلاح لی ۔ روں کی نظموں ، غزلوں اور رباعیوں کا مجموعہ’ روح رواں ‘کے نام سے شائع ہوا ۔ 

۲۶ ستمبر ۱۹۳۴ کو رواں کاانتقال ہوا ۔ 

 

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے