Malikzaada Manzoor Ahmad's Photo'

ملک زادہ منظور احمد

1929 - 2016 | لکھنؤ, انڈیا

اردو کی ممتازادبی شخصیت۔ مشاعروں کی معیار نظامت کے لئے مشہور

اردو کی ممتازادبی شخصیت۔ مشاعروں کی معیار نظامت کے لئے مشہور

ملک زادہ منظور احمد

غزل 19

نظم 1

 

اشعار 23

چہرے پہ سارے شہر کے گرد ملال ہے

جو دل کا حال ہے وہی دلی کا حال ہے

دیکھو گے تو ہر موڑ پہ مل جائیں گی لاشیں

ڈھونڈوگے تو اس شہر میں قاتل نہ ملے گا

  • شیئر کیجیے

خواب کا رشتہ حقیقت سے نہ جوڑا جائے

آئینہ ہے اسے پتھر سے نہ توڑا جائے

دریا کے تلاطم سے تو بچ سکتی ہے کشتی

کشتی میں تلاطم ہو تو ساحل نہ ملے گا

  • شیئر کیجیے

کچھ غم جاناں کچھ غم دوراں دونوں میری ذات کے نام

ایک غزل منسوب ہے اس سے ایک غزل حالات کے نام

کتاب 35

تصویری شاعری 1

 

ویڈیو 7

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر
khuda kare ke jo aaye hamare baad wo log hamare fan ki

Malikzada Manzoor Ahmed Born on 17th Oct,1929, in Bhidhunpur, Malikzada Manzoor showed his literary talent at an early age. He acquired PG degree in Urdu & English and later did Ph.D in Urdu literature. He is extremely good at recitation and has recited many ghazals/nazams at mushairas and such other literary functions. Malikzada Manzoor retired as professor, department of Urdu, Lucknow University. He is the author of several books and had also worked as an editor 'Imkaan" (monthly Urdu literary Journal from Lucknow). ملک زادہ منظور احمد

ترک_محبت اپنی خطا ہو ایسا بھی ہو سکتا ہے

ملک زادہ منظور احمد

زندگی میں پہلے اتنی تو پریشانی نہ تھی

ملک زادہ منظور احمد

معمول پہ ساحل رہتا ہے فطرت پہ سمندر ہوتا ہے

ملک زادہ منظور احمد

نہ خوف_برق نہ خوف_شرر لگے ہے مجھے

ملک زادہ منظور احمد

کچھ غم_جاناں کچھ غم_دوراں دونوں میری ذات کے نام

ملک زادہ منظور احمد

آڈیو 6

ترک_محبت اپنی خطا ہو ایسا بھی ہو سکتا ہے

زندگی میں پہلے اتنی تو پریشانی نہ تھی

معمول پہ ساحل رہتا ہے فطرت پہ سمندر ہوتا ہے

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

متعلقہ شعرا

"لکھنؤ" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے