Mazhar Mirza Jaan-e-Janaan's Photo'

مظہر مرزا جان جاناں

1699 - 1781 | دلی, انڈیا

مظہر مرزا جان جاناں

غزل 5

 

اشعار 8

خدا کے واسطے اس کو نہ ٹوکو

یہی اک شہر میں قاتل رہا ہے

رسوا اگر نہ کرنا تھا عالم میں یوں مجھے

ایسی نگاہ ناز سے دیکھا تھا کیوں مجھے

  • شیئر کیجیے

یہ حسرت رہ گئی کیا کیا مزے سے زندگی کرتے

اگر ہوتا چمن اپنا گل اپنا باغباں اپنا

جو تو نے کی سو دشمن بھی نہیں دشمن سے کرتا ہے

غلط تھا جانتے تھے تجھ کو جو ہم مہرباں اپنا

اتنی فرصت دے کہ رخصت ہو لیں اے صیاد ہم

مدتوں اس باغ کے سایہ میں تھے آزاد ہم

  • شیئر کیجیے

کتاب 7

 

تصویری شاعری 2

 

ویڈیو 3

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
دیگر
چلی اب گل کے ہاتھوں سے لٹا کر کارواں اپنا

مہدی حسن

چلی اب گل کے ہاتھوں سے لٹا کر کارواں اپنا

خورشید بیگم

ہم نے کی ہے توبہ اور دھومیں مچاتی ہے بہار

مہدی حسن

آڈیو 5

اس گل کو بھیجنا ہے مجھے خط صبا کے ہاتھ

تجلی گر تری پست و بلند ان کو نہ دکھلاتی

چلی اب گل کے ہاتھوں سے لٹا کر کارواں اپنا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

"دلی" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

بولیے