Munshi Naubat Rai Nazar Lakhnavi's Photo'

منشی نوبت رائے نظر لکھنوی

1866 - 1923 | لکھنؤ, ہندوستان

شاعر،خدنگ نظر،زمانہ کانپوراور ادیب جیسے رسائل کے مدیر

شاعر،خدنگ نظر،زمانہ کانپوراور ادیب جیسے رسائل کے مدیر

71
Favorite

باعتبار

گفتگو کی تم سے عادت ہو گئی ہے ورنہ میں

جانتا ہوں بات کرتی ہے کہیں تصویر بھی

وحشیوں کو قید سے چھوٹے ہوئے مدت ہوئی

گونجتا ہے شور اب تک کان میں زنجیر کا

وہ نگاہ شرمگیں ہو یا کسی کا انکسار

جھک کے جو مجھ سے ملا وہ ایک خنجر ہو گیا

تم ایسے بے خبر بھی شاذ ہوں گے اس زمانے میں

کہ دل میں رہ کے اندازہ نہیں ہے دل کی حالت کا

دیکھنا ہے کس میں اچھی شکل آتی ہے نظر

اس نے رکھا ہے مرے دل کے برابر آئینہ

فکر مآل تھی نہ غم روزگار تھا

ہم تھے جہاں میں اور ترا انتظار تھا

فنا ہونے میں سوز شمع کی منت کشی کیسی

جلے جو آگ میں اپنی اسے پروانہ کہتے ہیں

وہ شمع نہیں ہیں کہ ہوں اک رات کے مہماں

جلتے ہیں تو بجھتے نہیں ہم وقت سحر بھی

تمہید تھی جنوں کی گریباں ہوا جو چاک

یعنی یہ خیر مقدم فصل بہار تھا

بننے لگے ہیں داغ ستارے خوشا نصیب

تاریک آسمان شب انتظار تھا

یا دل ہے مرا یا ترا نقش کف پا ہے

گل ہے کہ اک آئینہ سر راہ پڑا ہے

سنتا ہوں کہ خرمن سے ہے بجلی کو بہت لاگ

ہاں ایک نگاہ غلط انداز ادھر بھی