Razi Akhtar Shauq's Photo'

رضی اختر شوق

1933 - 1999 | کراچی, پاکستان

غزل 39

اشعار 6

آپ ہی آپ دیے بجھتے چلے جاتے ہیں

اور آسیب دکھائی بھی نہیں دیتا ہے

  • شیئر کیجیے

ہم روح سفر ہیں ہمیں ناموں سے نہ پہچان

کل اور کسی نام سے آ جائیں گے ہم لوگ

  • شیئر کیجیے

دو بادل آپس میں ملے تھے پھر ایسی برسات ہوئی

جسم نے جسم سے سرگوشی کی روح کی روح سے بات ہوئی

مجھ کو پانا ہے تو پھر مجھ میں اتر کر دیکھو

یوں کنارے سے سمندر نہیں دیکھا جاتا

  • شیئر کیجیے

ہم اتنے پریشاں تھے کہ حال دل سوزاں

ان کو بھی سنایا کہ جو غم خوار نہیں تھے

  • شیئر کیجیے

کتاب 1

میرے موسم میرے خواب

 

1986

 

تصویری شاعری 1

مجھ کو پانا ہے تو پھر مجھ میں اتر کر دیکھو یوں کنارے سے سمندر نہیں دیکھا جاتا

 

ویڈیو 4

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر

رضی اختر شوق

رضی اختر شوق

خوشبو ہیں تو ہر دور کو مہکائیں_گے ہم لوگ

رضی اختر شوق

دن کا ملال شام کی وحشت کہاں سے لائیں

رضی اختر شوق

متعلقہ شعرا

  • انور خلیل انور خلیل ہم عصر

"کراچی" کے مزید شعرا

  • سلیم احمد سلیم احمد
  • سیماب اکبرآبادی سیماب اکبرآبادی
  • انور شعور انور شعور
  • عذرا عباس عذرا عباس
  • زہرا نگاہ زہرا نگاہ
  • سلیم کوثر سلیم کوثر
  • جمال احسانی جمال احسانی
  • فہمیدہ ریاض فہمیدہ ریاض
  • رسا چغتائی رسا چغتائی
  • محسنؔ بھوپالی محسنؔ بھوپالی