Umar Ansari's Photo'

عمر انصاری

1912 - 2005 | لکھنؤ, ہندوستان

غزل 8

اشعار 12

مسافروں سے محبت کی بات کر لیکن

مسافروں کی محبت کا اعتبار نہ کر

  • شیئر کیجیے

چلے جو دھوپ میں منزل تھی ان کی

ہمیں تو کھا گیا سایہ شجر کا

برا سہی میں پہ نیت بری نہیں میری

مرے گناہ بھی کار ثواب میں لکھنا

ای- کتاب 28

حرف ناتمام

 

1978

حاصل کلام

 

1998

حاصل کلام

 

1998

کشید جہاں

 

1987

کلیات عمر انصاری

حصہ ۔ 001

2001

نقش دوام

 

1982

صنم کدہ

 

1973

ساز بیخودی

 

1965

ترانۂ نعت

 

1975

عمر انصاری

فن اور شخصیت ایک نظر میں

 

تصویری شاعری 2

مسافروں سے محبت کی بات کر لیکن مسافروں کی محبت کا اعتبار نہ کر

مسافروں سے محبت کی بات کر لیکن مسافروں کی محبت کا اعتبار نہ کر

 

"لکھنؤ" کے مزید شعرا

  • ولی اللہ محب ولی اللہ محب
  • پون کمار پون کمار
  • عذرا پروین عذرا پروین
  • حیا لکھنوی حیا لکھنوی
  • جتیندر موہن سنہا رہبر جتیندر موہن سنہا رہبر
  • فضل لکھنوی فضل لکھنوی
  • منظر سلیم منظر سلیم
  • علی ظہیر رضوی لکھنوی علی ظہیر رضوی لکھنوی
  • گنیش بہاری طرز گنیش بہاری طرز
  • جگت موہن لال رواں جگت موہن لال رواں