Yaqoob Yawar's Photo'

یعقوب یاور

1952 | بنارس, انڈیا

یعقوب یاور

اشعار 6

اگر وہ آج رات حد التفات توڑ دے

کبھی پھر اس سے پیار کا خیال بھی نہ آئے گا

شہر سخن عجیب ہو گیا ہے

ناقد یہاں ادیب ہو گیا ہے

پہاڑ جیسی عظمتوں کا داخلہ تھا شہر میں

کہ لوگ آگہی کا اشتہار لے کے چل دیے

لہو مہکا تو سارا شہر پاگل ہو گیا ہے

میں کس صف سے اٹھوں کس کے لیے خنجر نکالوں

تو لا مکاں میں رہے اور میں مکاں میں اسیر

یہ کیا کہ مجھ پہ اطاعت تری حرام ہوئی

غزل 9

کتاب 27

"بنارس" کے مزید مصنفین

 

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے