عدیل زیدی

غزل 21

اشعار 26

دے حوصلے کی داد کے ہم تیرے غم میں آج

بیٹھے ہیں محفلوں کو سجائے ترے بغیر

  • شیئر کیجیے

میں اس سے قیمتی شے کوئی کھو نہیں سکتا

عدیلؔ ماں کی جگہ کوئی ہو نہیں سکتا

  • شیئر کیجیے

کہاں کے ماہر و کامل ہو تم ہنر میں عدیلؔ

تمہارے کام تو پروردگار کرتا ہے

  • شیئر کیجیے

تجھ سے جدا ہوئے تو یہ ہو جائیں گے جدا

باقی کہاں رہیں گے یہ سائے ترے بغیر

  • شیئر کیجیے

مرا دل ٹوٹ جانے پر میاں حیرت بھلا کیسی

اگر رستہ بدل جائے ستارے ٹوٹ جاتے ہیں

  • شیئر کیجیے

قطعہ 1

 

کتاب 7

اذان مجلس

 

2008

بیاض اختر

 

2009

چلتے چلتے

 

2001

کہاں آگئے ہم

 

2009

معتبر نامعتبر

 

2008

قرض جاں

 

2021

شاعر

شمارہ نمبر۔011

2009

 

تصویری شاعری 1

دے حوصلے کی داد کے ہم تیرے غم میں آج بیٹھے ہیں محفلوں کو سجائے ترے بغیر

 

ویڈیو 16

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر

عدیل زیدی

عدیل زیدی

عدیل زیدی

عدیل زیدی

عدیل زیدی

عدیل زیدی

عدیل زیدی

عدیل زیدی

عدیل زیدی

دکان_دار

یہ تاجران_دین ہیں عدیل زیدی

قرض_جاں سے نمٹ رہی ہے حیات

عدیل زیدی

مزید دیکھیے

متعلقہ شعرا

  • سید اختر رضا زیدی سید اختر رضا زیدی والد