noImage

میر سوز

1721 - 1798 | دلی, انڈیا

میر سوز

غزل 17

اشعار 7

جس کا تجھ سا حبیب ہووے گا

کون اس کا رقیب ہووے گا

سر زانو پہ ہو اس کے اور جان نکل جائے

مرنا تو مسلم ہے ارمان نکل جائے

  • شیئر کیجیے

ان سے اور مجھ سے یہی شرط وفا ٹھہری ہے

وہ ستم ڈھائیں مگر ان کو ستمگر نہ کہوں

  • شیئر کیجیے

رسوا ہوا خراب ہوا مبتلا ہوا

وہ کون سی گھڑی تھی کہ تجھ سے جدا ہوا

  • شیئر کیجیے

اہل ایماں سوزؔ کو کہتے ہیں کافر ہو گیا

آہ یا رب راز دل ان پر بھی ظاہر ہو گیا

  • شیئر کیجیے

کتاب 7

 

آڈیو 10

اپنے نالے میں گر اثر ہوتا

اگر میں جانتا ہے عشق میں دھڑکا جدائی کا

ترا ہم نے جس کو طلب_گار دیکھا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

متعلقہ شعرا

"دلی" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

بولیے