Shahab Jafri's Photo'

شہاب جعفری

1930 - 2000 | دلی, انڈیا

شہاب جعفری

غزل 15

نظم 8

اشعار 4

چلے تو پاؤں کے نیچے کچل گئی کوئی شے

نشے کی جھونک میں دیکھا نہیں کہ دنیا ہے

  • شیئر کیجیے

تو ادھر ادھر کی نہ بات کر یہ بتا کہ قافلہ کیوں لٹا

مجھے رہزنوں سے گلا نہیں تری رہبری کا سوال ہے

  • شیئر کیجیے

پاؤں جب سمٹے تو رستے بھی ہوئے تکیہ نشیں

بوریا جب تہ کیا دنیا اٹھا کر لے گئے

  • شیئر کیجیے

قلندری مری پوچھو ہو دوستان جنوں

ہر آستاں مری ٹھوکر ث جانا جاتا ہے

  • شیئر کیجیے

کتاب 1

 

تصویری شاعری 2

 

متعلقہ شعرا

"دلی" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے