Farhat Kanpuri's Photo'

فرحت کانپوری

1905 - 1952 | کانپور, ہندوستان

دل کی راہیں جدا ہیں دنیا سے

کوئی بھی راہبر نہیں ہوتا

دنیا نے خوب سمجھا دنیا نے خوب پرکھا

میری نظر کو دیکھا جب آپ کی نظر سے

دولت عہد جوانی ہو گئے

چند لمحے جو کہانی ہو گئے

آنکھوں میں بسے ہو تم آنکھوں میں عیاں ہو کر

دل ہی میں نہ رہ جاؤ آنکھوں سے نہاں ہو کر

فرحتؔ ترے نغموں کی وہ شہرت ہے جہاں میں

واللہ ترا رنگ سخن یاد رہے گا

ہستی کا راز کیا ہے غم ہست و بود ہے

عالم تمام دام رسوم و قیود ہے