Hanif Tarin's Photo'

حنیف ترین

1951 - 2020 | دلی, ہندوستان

غزل 11

اشعار 7

بستی کے حساس دلوں کو چبھتا ہے

سناٹا جب ساری رات نہیں ہوتا

محفل میں پھول خوشیوں کے جو بانٹتا رہا

تنہائی میں ملا تو بہت ہی اداس تھا

پانی نے جسے دھوپ کی مٹی سے بنایا

وہ دائرہ ربط بگڑنے کے لیے تھا

رشتے ناطے ٹوٹے پھوٹے لگے ہیں

جب بھی اپنا سایہ ساتھ نہیں ہوتا

ہر زخم کہنہ وقت کے مرہم نے بھر دیا

وہ درد بھی مٹا جو خوشی کی اساس تھا

کتاب 11

ابابیلیں نہیں آئیں

 

2006

دلت کویتا جاک اٹھی

 

2018

حنیف ترین

فن اور شخصیت

2004

کشت غزل نما

 

1999

کتاب صحرا

 

1995

لالۂ صحرائی

 

2014

لالۂ صحرائی

 

2014

میں نے زلزال کو لفظوں میں اتر کر دیکھا

 

 

رباب صحرا

 

1992

روئے شمیم سے نزہت عشق کی بہتی ہے

 

2012

مزید دیکھیے

"دلی" کے مزید شعرا

  • داغؔ دہلوی داغؔ دہلوی
  • فرحت احساس فرحت احساس
  • شاہ نصیر شاہ نصیر
  • حسرتؔ موہانی حسرتؔ موہانی
  • بیخود دہلوی بیخود دہلوی
  • راجیندر منچندا بانی راجیندر منچندا بانی
  • انیس الرحمان انیس الرحمان
  • آبرو شاہ مبارک آبرو شاہ مبارک
  • تاباں عبد الحی تاباں عبد الحی
  • خواجہ میر درد خواجہ میر درد