noImage

ناظم سلطانپوری

1927 | کولکاتا, انڈیا

ناظم سلطانپوری

غزل 17

اشعار 4

کتنی ویران ہے گلی دل کی

دور تک کوئی نقش پا بھی نہیں

  • شیئر کیجیے

بڑے قلق کی بات ہے کہ تم اسے نہ پڑھ سکے

ہماری زندگی تو اک کھلی ہوئی کتاب تھی

  • شیئر کیجیے

اقتضا وقت کا جو چاہے کرا لے ورنہ

ہم نہ تھے غیر کے احسان اٹھانے والے

  • شیئر کیجیے

اپنی سنجیدہ طبیعت پہ تو اکثر ناظمؔ

فکر کے شوخ اجالے بھی گراں ہوتے ہیں

  • شیئر کیجیے

کتاب 1

 

"کولکاتا" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI