Zuhoor Nazar's Photo'

ظہور نظر

1923 - 1981 | بہاول پور, پاکستان

ظہور نظر

غزل 15

اشعار 12

سنتے ہیں چمکتا ہے وہ چاند اب بھی سر بام

حسرت ہے کہ بس ایک نظر دیکھ لیں ہم بھی

وہ بھی شاید رو پڑے ویران کاغذ دیکھ کر

میں نے اس کو آخری خط میں لکھا کچھ بھی نہیں

نہ سو سکا ہوں نہ شب جاگ کر گزاری ہے

عجیب دن ہیں سکوں ہے نہ بے قراری ہے

  • شیئر کیجیے

وہ جسے سارے زمانے نے کہا میرا رقیب

میں نے اس کو ہم سفر جانا کہ تو اس کی بھی تھی

پاس ہمارے آکر تم بیگانہ سے کیوں ہو

چاہو تو ہم پھر کچھ دوری پر چھوڑ آئیں تمہیں

کتاب 1

کلیات ظہور نظر

 

1987

 

مزید دیکھیے

متعلقہ شعرا

  • احسان دانش احسان دانش ہم عصر

"بہاول پور" کے مزید شعرا

  • اعجاز توکل اعجاز توکل
  • خرم آفاق خرم آفاق
  • افضل خان افضل خان
  • سید ضیاءالدین نعیم سید ضیاءالدین نعیم
  • احتشام حسن احتشام حسن
  • مریم ناز مریم ناز
  • پارس مزاری پارس مزاری
  • اظہر فراغ اظہر فراغ
  • ذیشان اطہر ذیشان اطہر