Fayyaz Hashmi's Photo'

فیاض ہاشمی

1920 - 2011 | کراچی, پاکستان

فیاض ہاشمی

غزل 3

 

اشعار 3

عبث نادانیوں پر آپ اپنی ناز کرتے ہیں

ابھی دیکھی کہاں ہیں آپ نے نادانیاں میری

چوری خدا سے جب نہیں بندوں سے کس لیے

چھپنے میں کچھ مزا نہیں سب کو دکھا کے پی

نہ تم آئے نہ چین آیا نہ موت آئی شب وعدہ

دل مضطر تھا میں تھا اور تھیں بے تابیاں میری

 

گیت 1

 

کتاب 1

 

تصویری شاعری 1

 

ویڈیو 70

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
دیگر
آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

آشا بھوسلے

آج جانے کی ضد نہ کرو

فیاض ہاشمی

آج جانے کی ضد نہ کرو

منجری

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

سجاتا ترویدی

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

عثمان میر

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

پوجا شاہ تلوار

آج جانے کی ضد نہ کرو

کوشکی چکربتی

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

سادھنا سرگم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

پرینکا ویدیہ

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

شفقت امانت علی

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

بھوپندر سنگھ

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

کویتا سیٹھ

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

جاسپیندر نارولا

آج جانے کی ضد نہ کرو

انوپ جلوٹا

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

شفقت امانت علی

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

تانیہ ویلس

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

تانیہ ویلس

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

سمراٹ چھابرا

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

پوجا شاہ تلوار

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

آج جانے کی ضد نہ کرو

ضلع خان

آج جانے کی ضد نہ کرو

سادھنا سرگم

آج جانے کی ضد نہ کرو

نامعلوم

سمراٹ چھابرا

سمراٹ چھابرا

مستوں کے جو اصول ہیں ان کو نبھا کے پی

فیاض ہاشمی

مستوں کے جو اصول ہیں ان کو نبھا کے پی

کملا جھریا

"کراچی" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے