قیصر خالد کی تمام

غزل 21

اشعار 10

میٹھی باتیں، کبھی تلخ لہجے کے تیر

دل پہ ہر دن ہے ان کا کرم بھی نیا

ہو پائے کسی کے ہم بھی کہاں یوں کوئی ہمارا بھی نہ ہوا

کب ٹھہری کسی اک پر بھی نظر کیا چیز ہے شہر خوباں بھی

ڈال دی پیروں میں اس شخص کے زنجیر یہاں

وقت نے جس کو زمانے میں اچھلتے دیکھا

باتوں سے پھول جھڑتے تھے لیکن خبر نہ تھی

اک دن لبوں سے ان کے ہی نشتر بھی آئیں گے

تیرے بن حیات کی سوچ بھی گناہ تھی

ہم قریب جاں ترا حصار دیکھتے رہے

کتاب 3

دیوان شاد عظیم آبادی

 

2005

شعور عصر

 

2015

شعور عصر

 

2014

 

"ممبئی" کے مزید شعرا

  • ندا فاضلی ندا فاضلی
  • علی سردار جعفری علی سردار جعفری
  • اختر الایمان اختر الایمان
  • عبد الاحد ساز عبد الاحد ساز
  • ساحر لدھیانوی ساحر لدھیانوی
  • ذاکر خان ذاکر ذاکر خان ذاکر
  • سوپنل تیواری سوپنل تیواری
  • فضیل جعفری فضیل جعفری
  • راجیش ریڈی راجیش ریڈی
  • جاں نثاراختر جاں نثاراختر