وصی شاہ

غزل 53

اشعار 15

تمہارا نام لکھنے کی اجازت چھن گئی جب سے

کوئی بھی لفظ لکھتا ہوں تو آنکھیں بھیگ جاتی ہیں

اس جدائی میں تم اندر سے بکھر جاؤ گے

کسی معذور کو دیکھو گے تو یاد آؤں گا

جو تو نہیں ہے تو یہ مکمل نہ ہو سکیں گی

تری یہی اہمیت ہے میری کہانیوں میں

کون کہتا ہے ملاقات مری آج کی ہے

تو مری روح کے اندر ہے کئی صدیوں سے

جیسے ہو عمر بھر کا اثاثہ غریب کا

کچھ اس طرح سے میں نے سنبھالے تمہارے خط

کتاب 2

آنکھیں بھیگ جاتی ہیں

 

1997

محبت مستقل غم ہے

 

 

 

ویڈیو 14

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
مزاح
Aaraam se ek din kabhi ham baithe na ghar pe

وصی شاہ

go zaKHmii hai.n ham par use kyaa Gam hai hamaaraa

وصی شاہ

وصی شاہ

آڈیو 23

آج ہمیں یہ بات سمجھ میں آئی ہے

آنکھوں سے مری اس لیے لالی نہیں جاتی

اب جو لوٹے ہو اتنے سالوں میں

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

مزید دیکھیے

متعلقہ شعرا

  • علی زریون علی زریون ہم عصر

"لاہور" کے مزید شعرا

  • علامہ اقبال علامہ اقبال
  • فیض احمد فیض فیض احمد فیض
  • ظفر اقبال ظفر اقبال
  • ناصر کاظمی ناصر کاظمی
  • منیر نیازی منیر نیازی
  • جاوید شاہین جاوید شاہین
  • نبیل احمد نبیل نبیل احمد نبیل
  • ساغر صدیقی ساغر صدیقی
  • اقبال ساجد اقبال ساجد
  • احسان دانش احسان دانش