Aale Ahmad Suroor's Photo'

آل احمد سرور

1911 - 2002 | علی گڑہ, ہندوستان

جدید اردو تنقید کے بنیاد سازوں میں شامل ہیں

جدید اردو تنقید کے بنیاد سازوں میں شامل ہیں

مضمون 39

اقوال 29

شاعری میں واقعہ جب تک تجربہ نہ بنے، اس کی اہمیت نہیں ہے۔ خیال جب تک تخیل کے سہارے رنگا رنگ اور پہلودار نہ ہو، بیکار ہے اور احساس جب تک عام اور سطحی احساس سے بلند ہو کر دل کی دھڑکن، لہو کی ترنگ، روح کی پکار نہ بن جائے اس وقت تک اس میں وہ تھرتھراہٹ، گونج، لپک، کیفیت، تاثیر و دل گدازی اور دلنوازی نہیں آتی جو فن کی پہچان ہے۔

  • شیئر کیجیے

اچھا نقاد پڑھنے والے کو شاعر سے شاعری کی طرف لے جاتا ہے۔ معمولی نقاد شاعر میں الجھ کر رہ جاتا ہے۔

  • شیئر کیجیے

اچھی عشقیہ شاعری صرف عشقیہ ہی نہیں کچھ اور بھی ہوتی ہے۔ عشق زندگی کی ایک علامت بن جاتا ہے اور بادہ و ساغر کے پردے میں مشاہدۂ حق ہی نہیں مطالعۂ کائنات پر اس انداز سے تبصرہ ہوتا ہے کہ شعر ایک ابدی حقیقت کا پرتو بن جاتا ہے اور ہر دور میں اپنی تازگی قائم رکھتا ہے۔

  • شیئر کیجیے

طنز و مزاح 1

 

اشعار 19

غزل 31

نظم 6

کتاب 927

آل احمد سرور

کلیدی خطبہ: سرور دانشور

2001

آل احمد سرور

دانش ور، نقاد و شاعر

1997

آثار آل احمد سرور

 

2004

ادب اور نظریہ

 

1954

افکار کے دئیے

 

2000

اختر انصاری

 

1962

اخترشیرانی

انتخاب کلام اخترشیرانی

1956

عکس غالب

غالب کے اردو خطوں کا انتخاب

1973

آل احمد سرور نقدو نظر

 

2012

آل احمد سرور کی ادبی خدمات

 

2010

آڈیو 11

آج سے پہلے ترے مستوں کی یہ خواری نہ تھی

جب کبھی بات کسی کی بھی بری لگتی ہے

خدا_پرست ملے اور نہ بت_پرست ملے

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

متعلقہ شعرا

  • ن م راشد ن م راشد ہم عصر

"علی گڑہ" کے مزید شعرا

  • شہریار شہریار
  • سید امین اشرف سید امین اشرف
  • خلیل الرحمن اعظمی خلیل الرحمن اعظمی
  • اختر انصاری اختر انصاری
  • معین احسن جذبی معین احسن جذبی
  • آشفتہ چنگیزی آشفتہ چنگیزی
  • راحت حسن راحت حسن
  • اسعد بدایونی اسعد بدایونی
  • وحید اختر وحید اختر
  • احسن مارہروی احسن مارہروی