Javed Akhtar's Photo'

جاوید اختر

1945 | ممبئی, ہندوستان

فلم اسکرپٹ رائٹر، نغمہ نگار اور شاعر۔ ’ شعلے‘ اور ’ دیوار‘ جیسی فلموں کے لئے مشہور۔

فلم اسکرپٹ رائٹر، نغمہ نگار اور شاعر۔ ’ شعلے‘ اور ’ دیوار‘ جیسی فلموں کے لئے مشہور۔

غزل 51

نظم 32

اشعار 47

کبھی جو خواب تھا وہ پا لیا ہے

مگر جو کھو گئی وہ چیز کیا تھی

جدھر جاتے ہیں سب جانا ادھر اچھا نہیں لگتا

مجھے پامال رستوں کا سفر اچھا نہیں لگتا

ذرا موسم تو بدلا ہے مگر پیڑوں کی شاخوں پر نئے پتوں کے آنے میں ابھی کچھ دن لگیں گے

بہت سے زرد چہروں پر غبار غم ہے کم بے شک پر ان کو مسکرانے میں ابھی کچھ دن لگیں گے

  • شیئر کیجیے

قطعہ 4

 

کتاب 3

لاوا

 

2011

 

تصویری شاعری 3

یہ جیون اک راہ نہیں اک دوراہا ہے پہلا رستہ بہت سہل ہے اس میں کوئی موڑ نہیں ہے یہ رستہ اس دنیا سے بے_جوڑ نہیں ہے اس رستے پر ملتے ہیں ریتوں کے آنگن اس رستے پر ملتے ہیں رشتوں کے بندھن اس رستے پر چلنے والے کہنے کو سب سکھ پاتے ہیں لیکن ٹکڑے ٹکڑے ہو کر سب رشتوں میں بٹ جاتے ہیں اپنے پلے کچھ نہیں بچتا بچتی ہے بے_نام سی الجھن بچتا ہے سانسوں کا ایندھن جس میں ان کی اپنی ہر پہچان اور ان کے سارے سپنے جل بجھتے ہیں اس رستے پر چلنے والے خود کو کھو کر جگ پاتے ہیں اوپر اوپر تو جیتے ہیں اندر اندر مر جاتے ہیں دوسرا رستہ بہت کٹھن ہے اس رستے میں کوئی کسی کے ساتھ نہیں ہے کوئی سہارا دینے والا نہیں ہے اس رستے میں دھوپ ہے کوئی چھاؤں نہیں ہے جہاں تسلی بھیک میں دے دے کوئی کسی کو اس رستے میں ایسا کوئی گاؤں نہیں ہے یہ ان لوگوں کا رستا ہے جو خود اپنے تک جاتے ہیں اپنے آپ کو جو پاتے ہیں تم اس رستے پر ہی چلنا مجھے پتا ہے یہ رستہ آسان نہیں ہے لیکن مجھ کو یہ غم بھی ہے تم کو اب تک کیوں اپنی پہچان نہیں ہے

 

ویڈیو 50

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر
At a mushaira

جاوید اختر

Fasaad ke baad - a nazm

جاوید اختر

Hamare shauq ki ye inteha thi

جاوید اختر

Javed Akhtar Explains the Ghazal

جاوید اختر

Kabir ke dohon se, Mir ki shayari tak

جاوید اختر

Kal Jahaan deewar thi hai aaj ek dar dekhiye

جاوید اختر

kal jahaan diivaar thi hai aaj

جاوید اختر

Reciting own poetry

جاوید اختر

kal jahaan diivaar thi hai aaj

جاوید اختر

آنسو

کسی کا غم سن کے جاوید اختر

بنجارہ

میں بنجارہ جاوید اختر

بھوک

آنکھ کھل گئی میری جاوید اختر

جدھر جاتے ہیں سب جانا ادھر اچھا نہیں لگتا

جاوید اختر

جینا مشکل ہے کہ آسان ذرا دیکھ تو لو

جاوید اختر

ذرا موسم تو بدلا ہے مگر پیڑوں کی شاخوں پر نئے پتوں کے آنے میں ابھی کچھ دن لگیں_گے

جاوید اختر

شبانہ

یہ آئے دن کے ہنگامے جاوید اختر

نگل گئے سب کی سب سمندر زمیں بچی اب کہیں نہیں ہے

جاوید اختر

کبھی کبھی میں یہ سوچتا ہوں کہ مجھ کو تیری تلاش کیوں ہے

جاوید اختر

کل جہاں دیوار تھی ہے آج اک در دیکھیے

جاوید اختر

کل جہاں دیوار تھی ہے آج اک در دیکھیے

جاوید اختر

متعلقہ شعرا

  • سلمان اختر سلمان اختر بھائی
  • حامد اقبال صدیقی حامد اقبال صدیقی ہم عصر
  • جاں نثاراختر جاں نثاراختر والد
  • شمیم عباس شمیم عباس ہم عصر
  • مضطر خیرآبادی مضطر خیرآبادی دادا
  • گلزار گلزار ہم عصر
  • منور رانا منور رانا ہم عصر
  • اسرار الحق مجاز اسرار الحق مجاز Uncle

"ممبئی" کے مزید شعرا

  • شکیل بدایونی شکیل بدایونی
  • گلزار گلزار
  • علی سردار جعفری علی سردار جعفری
  • اختر الایمان اختر الایمان
  • ساحر لدھیانوی ساحر لدھیانوی
  • ندا فاضلی ندا فاضلی
  • مجروح سلطانپوری مجروح سلطانپوری
  • ذاکر خان ذاکر ذاکر خان ذاکر
  • راجیش ریڈی راجیش ریڈی
  • سوپنل تیواری سوپنل تیواری