Siraj Lakhnavi's Photo'

سراج لکھنوی

1894 - 1968 | لکھنؤ, ہندوستان

غزل 30

اشعار 55

آنکھیں کھلیں تو جاگ اٹھیں حسرتیں تمام

اس کو بھی کھو دیا جسے پایا تھا خواب میں

as my eyes did ope my yearnings did rebound

for I lost the person who in my dreams I found

  • شیئر کیجیے

آپ کے پاؤں کے نیچے دل ہے

اک ذرا آپ کو زحمت ہوگی

  • شیئر کیجیے

کہاں ہیں آج وہ شمع وطن کے پروانے

بنے ہیں آج حقیقت انہیں کے افسانے

  • شیئر کیجیے

ہاں تم کو بھول جانے کی کوشش کریں گے ہم

تم سے بھی ہو سکے تو نہ آنا خیال میں

  • شیئر کیجیے

یہ آدھی رات یہ کافر اندھیرا

نہ سوتا ہوں نہ جاگا جا رہا ہے

  • شیئر کیجیے

کتاب 2

شعلۂ آواز

 

1920

شعلۂ آواز

 

1960

 

تصویری شاعری 3

آپ کے پاؤں کے نیچے دل ہے اک ذرا آپ کو زحمت ہوگی

آنکھیں کھلیں تو جاگ اٹھیں حسرتیں تمام اس کو بھی کھو دیا جسے پایا تھا خواب میں

آنکھیں کھلیں تو جاگ اٹھیں حسرتیں تمام اس کو بھی کھو دیا جسے پایا تھا خواب میں

 

مزید دیکھیے

متعلقہ شعرا

  • میکش لکھنوی میکش لکھنوی ہم عصر
  • حیات وارثی حیات وارثی شاگرد

"لکھنؤ" کے مزید شعرا

  • مصحفی غلام ہمدانی مصحفی غلام ہمدانی
  • حیدر علی آتش حیدر علی آتش
  • امداد علی بحر امداد علی بحر
  • عرفان صدیقی عرفان صدیقی
  • ارشد علی خان قلق ارشد علی خان قلق
  • منور رانا منور رانا
  • خواجہ محمد وزیر خواجہ محمد وزیر
  • یگانہ چنگیزی یگانہ چنگیزی
  • عزیز لکھنوی عزیز لکھنوی
  • وزیر علی صبا لکھنؤی وزیر علی صبا لکھنؤی