Siraj Lakhnavi's Photo'

سراج لکھنوی

1894 - 1968 | لکھنؤ, انڈیا

سراج لکھنوی

غزل 32

نظم 2

 

اشعار 55

آنکھیں کھلیں تو جاگ اٹھیں حسرتیں تمام

اس کو بھی کھو دیا جسے پایا تھا خواب میں

  • شیئر کیجیے

کہاں ہیں آج وہ شمع وطن کے پروانے

بنے ہیں آج حقیقت انہیں کے افسانے

  • شیئر کیجیے

ہاں تم کو بھول جانے کی کوشش کریں گے ہم

تم سے بھی ہو سکے تو نہ آنا خیال میں

  • شیئر کیجیے

آپ کے پاؤں کے نیچے دل ہے

اک ذرا آپ کو زحمت ہوگی

  • شیئر کیجیے

یہ آدھی رات یہ کافر اندھیرا

نہ سوتا ہوں نہ جاگا جا رہا ہے

  • شیئر کیجیے

کتاب 4

 

تصویری شاعری 3

 

متعلقہ شعرا

"لکھنؤ" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے